PML-N Vice President Maryam Nawaz Sharif has said

شہرکی خبریں 8 دسمبر کو آر یا پار، ہم جنگ جیت چکے، صرف فتح کا اعلان باقی ہے: مریم نواز

مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز شریف نے کہا ہے کہ تمام منتخب ایم این ایز اور سینیٹرز سے درخواست کرتی ہوں کہ وہ اپنی عزت کو پہچانیں، اگر آپ کی پارٹیوں نے استعفوں کا فیصلہ کیا تو کسی کے دباؤ میں آنے سے انکار کر دیں۔

 مسلم لیگ (ن) کے سوشل میڈیا کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے انہوں اراکین اسمبلی اور سینیٹرز کو انتباہ کیا کہ اگر کسی نے پارٹی سے دغا کیا تو لوگ اس کے گھر کا گھیراؤ کریں گے۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ 8 دسمبر کو پی ڈی ایم کے اجلاس میں اہم فیصلے ہونے جا رہے ہیں۔ عوام 13 دسمبر کو مینار پاکستان جلسے میں آئیں کیونکہ یہ حکومت گھر جائے گی تو پاکستان چلے گا۔ یہ حکومت گھر جائے گی تو آٹا، چینی اور سبزیاں سستی ہوں گی۔ ہم مینار پاکستان میں اپنی فتح کے جھنڈے گاڑیں گے۔ لاہور میں جگہ، جگہ جا کرعوام کو جلسے میں آنے کی خود دعوت دوں گی۔

لیگی رہنما نے کہا کہ میاں نواز شریف نے خاندان پر ظلم سہہ کر عوام کی سربلندی کا علم اٹھایا ہے۔ پی ڈی ایم بہت بڑے بڑے فیصلے کرنے جا رہی ہے۔ پاکستان کی عوام جلد خوشخبری سنیں گے، 13 دسمبر کے جلسے میں صرف اعلان ہونا باقی ہے۔

حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ تبدیلی سرکار کے تمام وعدے جھوٹ نکلے، سبز پاسپورٹ کو عزت دلوانے کے دعویداروں نے پاکستانی پروازوں پر پابندی لگوا دی۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ ڈرپوک حکمران دو منٹ بھی عوام کے درمیان نہیں آ سکتے۔ الیکشن چوری کرکے نااہل حکومت ہمارے سروں پر مسلط کر دی گئی۔ ایک پیج پر ہونے کے باوجود اس بس کو روز دھکا لگانا پڑتا ہے کیونکہ سلیکٹڈ سے بس نہیں چل رہی۔

اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے پر بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ عوام روز اٹھتے ہیں تو پہلی خبر مہنگائی کی ملتی ہے۔ پہلے 100 روپے میں ہانڈٰی پک جاتی تھی، اب ہزار روپے میں پکتی ہے۔ گیس آتی نہیں لیکن پچاسم پچاس ہزار کے بل آتے ہیں۔

مریم نواز نے الزام عائد کیا کہ ایل این جی دیر سے منگوانے کا مقصد دوستوں کو فائدہ پہنچانا تھا۔ ایل این جی تاخیر سے منگوانے سے عوام کو 122 ارب کا نقصان ہوا۔ پورے پاکستان میں جعلی حکومت نے ایک بھی ہسپتال نہیں بنایا۔ آج خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں آکسیجن نہ ملنے سے 7 مریض چل بسے۔ لاہور کے چلڈرن ہسپتال میں فنڈز نہ ملنے کی وجہ سے 100 بچے مر گئے۔ شہباز شریف حکومت کی گرانٹ کو اس حکومت نے ختم کر دیا۔ اب چلڈرن ہسپتال کے پاس پیسے نہیں ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں