بلدیاتی ایکٹ 2021 پنجاب اسمبلی سے منظور کرانے کا فیصلہ 1

بلدیاتی ایکٹ 2021 پنجاب اسمبلی سے منظور کرانے کا فیصلہ

لوئر مال پنجاب حکومت کانیا بلدیاتی ایکٹ 2021ء پنجاب اسمبلی میں سے پاس کرانے کا فیصلہ، ایکٹ آئندہ اجلاس میں پیش کردیا جائے گا۔

صوبائی وزیر قانون نے تصدیق کردی ہےکہ وزراء کی کمیٹی نے نئے بلدیاتی ایکٹ کےمسودے پر مشاورت مکمل کرلی، جس کے بعد بلدیاتی اداروں کی تعداد 258 کردی گئی۔ صوبائی وزیر قانون پنجاب راجہ بشارت نے نئے بلدیاتی ایکٹ 2021 ء کے مسودہ کو حتمی شکل دے دی۔

سٹی 42 سے گفتگو کرتے ہوئے راجہ بشارت نے کہاکہ پنجاب اسمبلی کا حالیہ اجلاس اپوزیشن کی ریکوزیشن پر بلایا گیا، بلدیاتی ایکٹ 2021 کو آرڈیننس کے ذریعے نافذ نہیں کیا جائے گا، پنجاب اسمبلی کے آئندہ اجلاس میں نئے بلدیاتی ایکٹ پر مکمل بحث کرائی جائے گی کوشش ہوگی کہ اتفاق رائے سے نیا بلدیاتی ایکٹ منظور ہو۔بلدیاتی اداروں کو بلدیاتی ایکٹ 2013ء کے تحت مکمل بحال کر دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ بلدیاتی نمائندے دسمبر تک فرائض سرانجام دیں گے، نئے مسودے کے مطابق بلدیاتی ایکٹ 2021ء کے تحت بلدیاتی اداروں کی تعداد 258 کردی گئی۔ نئے بلدیاتی ایکٹ کے تحت لاہور سمیت صوبہ بھر میں 11 میٹروپولیٹن کارپوریشنز ہونگی، نئے قانون کے تحت 15 میونسپل کارپوریشنز جبکہ 133 میونسپل کمیٹیاں بنائی گئیں ہیں ٹاؤن کمیٹیوں کی تعداد 64 کردی گئی جبکہ 35 ضلع کونسلز ہونگی، 20 ہزار ووٹرز پر مشتمل ایک نیبر ہوڈ کونسل تشکیل دی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں