The moon will hit the earth

چاند زمین سے ٹکرا جائے گا، تمام چیزیں مشرق کی طرف اڑنے لگیں گی اگر زمین یہ ایک کام کرنا بند کر دے تو

یہ کائنات ہماری سوچ سے زيادہ وسیع ہے اور ہمارا نظام شمسی ایک چھوٹا سا حصہ ہے جس میں ہماری زمین سورج کے گرد اپنے مدار میں گھومتی رہتی ہے۔ اور اس کی یہ گردش دن رات کا سبب ہونے کے ساتھ ساتھ موسموں کی تبدیلی کا بھی باعث ہوتی ہے

سائنسدانوں کے مطابق زمین سورج کے گرد 1670 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گردش کرتی ہے مگر اس کی یہ تیز رفتاری ہمیں محسوس نہیں ہوتی ہے۔ یہ گردش صدیوں سے قائم ہے اور اسی طرح قیامت تک جاری و ساری رہے گی

لیکن سائنسدانوں نے تخیالات و تحقیقات کے گھوڑے دوڑا کر اس بات کی تحقیق کی ہے کہ اگر یہ زمین اچانک گردش کرنا چھوڑ دے اور رک جائے تو اس کے اس زمین پر اور اس کے رہنے والوں پر کیا اثرات مرتب ہو سکتے ہیں۔ ان اثرات میں سے کچھ اس طرح سے ہو سکتے ہیں

تمام چیزیں مشرق کی طرف اڑنے لگیں گی

ناسا کے سائنسدانوں کے مطابق زمین اگر کسی وجہ سےاچانک حرکت کرنا بند کر دے تو زمین پر تمام اشیا جو زمین کی اس تیز رفتار حرکت کی عادی ہیں جمود کے قانون کے مطابق 1600 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے مشرق کی طرف اڑنا شروع کر دیں گی ۔ زمین کا سارا نظام تلپٹ ہو جائے گا

چاند زمین سے ٹکرا جائے گا، تمام چیزیں مشرق کی طرف اڑنے لگیں گی اگر زمین یہ ایک کام کرنا بند کر دے تو 1

سونامی کا خطرہ

سمندر کی لہریں اور پانی زمین کی گردش کی وجہ سے سمندر تک محدود ہیں۔ لیکن اگر زمین کی گردش رک جائے تو اس سے سمندر میں موجود پانی بھی آزاد ہو جائے گا جس سے بڑی بڑی لہریں پیدا ہوں گی ۔ ان لہروں کے سبب سونامی کا خطرہ پیدا ہو جائے گا اور ساری زمین پانی کے اندر ڈوب جانے کے خطرات بھی پیدا ہو سکتے ہیں

تیز ہوا کا طوفان

اگر زمین کی گردش تھم جائے تو جیسے سمندر کا پانی آزاد ہو جائے گا اسی طرح سائنسدانوں کے مطابق ہوا بھی آزاد ہو جائے گی اور 1100 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنا شروع کر دے گی زمین کی یہ رفتار کسی بھی چیز کو زمین پر ٹکنے نہیں دے گی اور ہر چیز ہوا کے بگولوں کے ساتھ اڑنا شروع کر دے گی

زلزلے آئیں گے

زمین کی گردش اور اس کی کشش ثقل زمین کے اندر موجود چیزوں کو اندر ہی بند رہنے پر مجبور کرتی ہے لیکن اگر یہ گردش ختم ہو جائے گی تو زمین کے اندر ہر چیز حرکت کرنا شروع ہو جائے گی- زمین کی تہہ میں موجود لاوا ابلنے لگے گا اور زمین کی سطح سے باہر آنے کے لیے زور لگائے گا جس سے زلزلے آئیں گے

چاند زمین سے ٹکرا جائے گا، تمام چیزیں مشرق کی طرف اڑنے لگیں گی اگر زمین یہ ایک کام کرنا بند کر دے تو 2

موسم ختم ہو جائيں گے

زمین کے اندر دن رات کا ہونا اور موسموں کی تبدیلی اس کی گردش کے سبب ہی ممکن ہے اگر زمین کی گردش رک جائے گی تو موسم کی تبدیلی بھی تھم جائے گی زمین کا جو حصہ سورج کے سامنے ہو گا وہ شدید گرم اور جو پیچھے ہو گا وہ شدید ٹھنڈا ہو جائے گا موسموں کی اس شدت کے سبب تمام حیات ختم ہو جائے گی

چاند زمین سے ٹکڑا جائے گا

چاند زمین کے گرد اپنے محور کے گرد گھوم رہا ہے اگر زمین اپنی گردش ختم کر دے گی تو چاند کا محور بھی چھوٹا ہونا شروع ہو جائے گا اور وقت کے ساتھ ساتھ وہ زمین کے قریب تر آنے لگے گا اور ایک وقت آئے گا جب وہ زمین سے ٹکرا جائے گا

یہ تمام تحقیقات پڑھنے کے بعد یہ محسوس ہوتا ہے کہ کیا یہی قیامت ہوگی اس حوالے سے اپنی رائے سے کمنٹ میں ضرور آگاہ کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں