pdm-meeting-members-assembly-resignations

پی ڈی ایم کا اسمبلیوں سے مستعفی ہونے کا فیصلہ

پی ڈی ایم کااسمبلیوں سےاستعفے دینے کااعلان، مولانافضل الرحمان کا کہنا ہے کہ اکتیس دسمبرتک تمام ارکان اپنے استعفےپارٹی قائدین کوجمع کرادیں۔ استعفے دے کرواپس نہیں لیں گے۔

پی ڈی ایم نے اسمبلیوں سےاستعفے دینے کااعلان کردیا، پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ کا سربراہی اجلاس اسلام آباد میں ہوا  جس میں تمام پارٹیوں نے اجلاس میں شرکت کی ،  نواز شریف ، آصف علی زرداری اور اختر مینگل نے ویڈیو لنک سے شرکت کی ۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ 13 دسمبر کا جلسہ لاہور مینار پاکستان پر ہی ہو گا ،  حکومت کیساتھ کسی قسم کے مذاکرات نہیں ہوں گے، 31 دسمبر تک تمام ارکان استعفے پارٹی قیادت کو جمع کرائیں گے ، جلسوں اور مظاہروں کا شیڈول طے کیا جائے گا۔

سربراہ پی ڈی ایم مولانا فضل الرحمان نے واضح کیا کہ لاہور جلسہ حکومت کیلئے آخری کیل ثابت ہو گا ،  استعفے دے دئیے تو واپس نہیں لیں گے ،  کل اسٹیرنگ کمیٹی کے اجلاس میں ملک میں پہیاجام ہڑتال،شٹرڈاون کاشیڈول طے ہوگا، اسٹیرنگ کمیٹی اجلاس میں اسلام آباد لانگ مارچ کی تاریخ طے کی جائے گی۔

 اپوزیشن نے حکومت سے مذاکرات سے بھی صاف انکار کردیا ۔لاہورکاجلسہ روکاگیاتوملتان سے براحشرہوگا۔ پی ڈی ایم کے سربراہ نے واضح کرتے ہوئے کہاکہ اتفاقِ رائے سے آگے بڑھ رہے ہیں،لانگ مارچ کی تاریخ اسٹیئرنگ کمیٹی طے کرے گی۔لانگ مارچ کب کرنا ہے؟؟؟ پی ڈی ایم کی سٹیرنگ کمیٹی کا اجلاس کل 5 بجے طلب اجلاس کی صدارت احسن اقبال کریں گے۔ اجلاس میں لانگ مارچ کے شیڈول کو حتمی شکل دی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں