maryam-nawaz-claim-wining-by-election

مریم نواز نے ضمنی انتخابات میں فتح کا دعویٰ‌ کردیا

لاہور: مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے ڈسکہ کے ضمنی انتخابات میں فتح کا دعویٰ کرتے ہوئے حکومت پر الزامات کی بوچھاڑ کردی۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مریم نواز کا کہنا تھا کہ اللہ کاشکرہے کل تینوں حلقوں میں ہونے والے ضمنی الیکشن میں مسلم لیگ ن کو شاندار فتح ملی،ڈسکہ،وزیرآباد،نوشہرہ کےعوام کا شکریہ ادا کرتی ہوں کہ وہ وہ بڑی تعداد میں باہر نکلے اور مسلم لیگ ن کے امیدوار کو ووٹ دیا، عوام نے دھونس جبر کا سامنا کیا اور اُس کے سامنے ڈٹے رہے۔

مریم نواز نے مسلم لیگ ن کے کارکنان، ووٹرز اور رہنماؤں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ عوام نے ووٹ کوعزت دوکےبیانیےکو سپورٹ کیا، کل انہوں نے ووٹ کی عزت کی جنگ لڑی، پھر پہرا دیا اور سرخرو ہوئے۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ عوام جاگتےرہے اور انہوں نے ووٹ چوروں کوپکڑا کیونکہ وہ اب ایسے لوگوں کو پہچان چکے ہیں۔ مسلم لیگ ن کی نائب صدر کا کہنا تھا کہ رات کو پولیس اہلکار رانا ثنا اللہ کو گرفتار کرنے آئے تھے مگر پھر انہیں احساس ہوا کہ یہ کیس رانا صاحب کے خلاف بنتا ہی نہیں ہے۔

اُن کا کہنا تھا کہ رانا ثنا اللہ سے بات ہوئی تو انہوں نے کہا کہ اگر گرفتار کرنا ہےتو شوق سے کریں، مجھے اس کا کوئی ڈر نہیں، احسن اقبال بھی صبح10بجےتک وہاں بیٹھےرہے، ہم مگرمچھ کےجبڑےسےتینوں نشستیں کھینچ کر لائے اور فتح حاصل کی۔

مریم نواز نے الزام عائد کیا کہ کل انتخابات میں دھاندلی ہوئی جس کو بے نقاب کرنا ہے، ایک سیٹ کی خاطر دو بے گناہ نوجوانوں کی جانیں چلی گئیں، کل جاں بحق ہونے والوں میں سے ایک کاتعلق حکمراں جماعت سے بھی تھا، دو نوجوانوں کی جانیں دھاندلی اور سیاست کی نذر ہوگئیں۔

مسلم لیگ ن کی نائب صدر کا کہنا تھا کہ تینوں نشستیں مسلم لیگ ن کی تھیں اس میں شک کی کوئی گنجائش نہیں، حکومت نے ریاستی اداروں کی مدد سے سرے کرائے جس کے نتائج مسلم لیگ ن کے حق میں آئے، جب انہیں ہماری فتح کا معلوم ہوا تو انہوں نے پلان بنایا،  نوشہرہ میں ن لیگ کےشیر نے انہیں گھرمیں گھس کر مارا کیونکہ یہ سوچ بھی نہیں سکتے تھے مسلم لیگ ن نوشہرہ سے فتح حاصل کرلے گی، اس لیے انہوں نے دو سیٹوں پر نظر رکھی ہوئی تھی۔ مریم نواز کا کہنا تھا کہ عوام حکومت کی پالیسی سے تنگ آچکے ہیں اور اب وہ نجات چاہتے ہیں۔

مریم نواز کا مزید کہنا تھا کہ ڈسکہ اور وزیرآبادکی سیٹیں ن لیگ کی ہی تھیں، انہیں علم تھا کہ وزیرآبادمیں70اور30کامقابلہ تھا۔ مسلم لیگ ن کی نائب صدر نے پریس کانفرنس میں چند ویڈیوز بھی دکھائیں اور بتایا کہ 20 سے زائد پریزائیڈنگ افسران لاپتہ ہوگئے تھے،  پھر وہ صبح 6 بجے بمعہ پولنگ بیگز حاضر ہوئے اور ہمارے امیدوار نے اُن افسران کو صبح پکڑا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں