chaudhry-nisar-take-oath-as-punjab-assembly

چوہدری نثار کب پنجاب اسمبلی کا حلف لیں گے؟ اہم اعلان ہوگیا

لاہور: سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کل رکن پنجاب اسمبلی کا حلف اٹھائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق چوہدری نثار کی جانب سے جاری تحریری بیان میں کہا گیا کہ کل پنجاب اسمبلی اجلاس میں رکنیت کا حلف اٹھاؤں گا، حلف اٹھانے کا فیصلہ حلقہ کےعوام کی مشاورت سے کیا ہے۔

چوہدری نثار نے لکھا کہ پچھلے چند دنوں سے مختلف خبریں اور کہانیاں گردش کرتی رہیں، مجھ سمیت میرے کسی ترجمان نے اس پر کوئی لب کشائی نہیں کی، باہمی مشاورت کے بعد حلف اٹھانےکا فیصلہ کیا ہے، تنخواہ اور ٹی اےڈی اے سمیت مراعات نہیں لوں گا۔

چوہدری نثار نے واضح کیا کہ سیٹ چھوڑ کر ضمنی الیکشن میں حصہ لینا عجیب منطق ہوگی، اور الیکشن کا بائیکاٹ کرنا اورمیدان کھلا چھوڑنا اس سے بھی بڑی سیاسی غلطی ہوگی۔

اپنے بیان میں سابق وفاقی وزیر داخلہ نے کہا کہ حلف اٹھانےکا مطلب اپنے مؤقف سےتبدیلی نہیں ہے، حلف اٹھانےکامطلب سیاسی حالات اور محرکات کو کنٹرول کرناہے اور عوام کو کرونا سےبچانا بھی حلف اٹھانےکی وجہ بنا ہے۔

چوہدری نثار کی جانب سے یہ فیصلہ ایسے وقت میں سامنے آیا ہے کہ حکومت کی جانب سے توقع کی جارہی ہے کہ وہ ایک آرڈیننس منظور کرے گی ، جس میں ان قانون سازوں کی رکنیت منسوخ کردی جائے گی، جنہوں نے اپنے انتخاب کے بعد حلف نہیں لیا۔

یاد رہے کہ کابینہ کمیٹی برائے قانون سازی نے الیکشن ایکٹ 2017 میں ایک ترمیم منظور کی تھی ، جس کے مطابق منتخب نمائندہ 60 دن کے اندر حلف نہ اٹھائے تو ایک نشست خالی ہوجائے گی۔

خیال رہے چوہدری نثار نے 2018 کے عام انتخابات میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 59، این اے 63 سے بطور آزاد امیدوار الیکشن لڑا مگر انھیں تحریک انصاف کے امیدوار نے شکست دے دی تھی۔

چوہدری نثار پی پی 10 راولپنڈی سے رکن صوبائی اسمبلی منتخب ہوئے تھے، لیکن طبیعت خراب ہونے کی وجہ سے بیرون ملک چلے گئے تھے، جس کی باعث وہ حلف نہ اٹھا سکے تھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں