Attempt to attack Nawaz Sharif

انگلینڈ میں نواز شریف پر حملے کی کوشش

لندن(تیزخبر نیوز )سابق وزیراعظم نواز شریف پر برطانیہ میں ان کے دفتر  باہر حملے کی کوشش کی گئی۔

صحافی مرتضی علی شاہ کے مطابق ماسک پہنے چار افراد نے نواز شریف پر ان کے دفتر کے باہر حملے کی کوشش کی،لندن پولیس کو حملے سے آگاہ کردیا گیا ہےا ور تحقیقات جاری ہیں۔اطلاعات ہیں کہ حملہ کرنے والے ایک شخص کے پاس اسلحہ بھی موجود تھا۔

4 نامعلوم افراد کی حسن نواز کے دفتر میں داخل ہونے کی کوشش نوازشریف بھی دفتر میں موجود تھے، نقاب پوش افراد نے نوازشریف کے گارڈز کے ساتھ بحث وتکرار بھی کی، لندن پولیس نے واقعے کی تحقیقات کا آغاز کردیا

لندن 4 نامعلوم نقاب پوش افراد نے حسن نواز کے دفتر میں داخل ہونے کی کوشش کی،ان افراد نے سابق وزیر اعظم نوازشریف کے گارڈز کے ساتھ بحث وتکرار بھی کی، لندن پولیس نے واقعے کی تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق قائد مسلم لیگ ن اورسابق وزیراعظم محمد نوازشریف کے صاحبزادے حسن نواز کے لندن دفتر میں نامعلوم افراد نے داخل ہونے کی کوشش کی،اس موقع پر اسحاق ڈار اور عابد شیر علی بھی دفتر میں موجود تھے،حسن نواز کے دفتر آنے والے افراد نے نوازشریف گارڈز کے ساتھ بحث وتکرار بھی کی۔نوازشریف کے گارڈز نے پولیس بلائی تو چاروں افراد وہاں سے چلے گئے۔

 پولیس نے معاملے کی تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

مزید بتایا گیا ہے کہ مزید برآں ن لیگی رہنماؤں عابد شیر علی، راشد نصراللہ اور ناصر بٹ نے اپنے تاثرات کا اظہار کیا کہ ن لیگی رہنماؤں نے ان افراد کے ساتھ کافی بحث بھی کی۔ وہاں موجود ن لیگی رہنماؤں نے کہا کہ نواز شریف کی موجودگی میں ان غنڈہ افراد نے دفتر کے اندر گھسنے اور حملہ کرنے کی کوشش کی

نشااللہ ہم حق پر کھڑے ہیں اور آخری سانس تک کھڑے رہیں گے۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ محمد نواز شریف پر قاتلانہ حملہ کرنے والوں نے بتایا کہ ہمیں پیسے دے کر بھیجا گیا ہے، حملے کے وقت نواز شریف صاحب دفتر میں موجود تھے۔دوسری جانب نائب صدر مسلم لیگ ن مریم نواز نے اپنے ردعمل میں کہا کہ نواز شریف کی زندگی کے ساتھ دوران حراست کھلواڑ کرنے والے اب تک باز نہیں آئے۔نواز شریف کا مقابلہ اس سوچ سے ہے جس نے میری بیمار والدہ کی تصویریں بنانے کی کوشش کی،ہوٹل میں میرے کمرے کا دروازہ توڑا اور آج پھر نواز شریف پر حملہ آور ہونے کی کوشش کی۔ خدا کسی کو کم ظرف اور بزدل دشمن نہ دے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں