announces-action-against-violent-protesters

ملک بھر میں بند راستے کھلوانے کیلئے تمام اقدامات اٹھانے کا فیصلہ

اسلام آباد: حکومت نے ملک بھر میں بند راستے کھلوانے کے لیے تمام اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے۔

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید کی زیر صدارت امن وامان کی صورتحال پر اجلاس ہوا جس میں وزیر مذہبی امور، چیف کمشنر ، آئی جی اسلام آباد شریک ہوئے جب کہ چیف سیکرٹری اور آئی جی پنجاب نے ویڈیو لنک کے ذریعے اجلاس میں شرکت کی جب کہ اجلاس میں مذہبی جماعت کے احتجاج سے  پیداصورتحال کا جائزہ لیا گیا۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ قانون توڑنے والوں سے سختی سے نمٹا جائے گا اور راستے کھلوانے کے لیے تمام اقدامات کیے جائیں۔

اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ جہاں حالات خراب ہوں گے وہاں 24گھنٹے کے لیے موبائل انٹرنیٹ سروس بند ہو گی۔

لاہور: پنجاب حکومت نے دھرنے پر بیٹھے پرتشدد مظاہرین کے خلاف ایکشن شروع کرنے کا اعلان کردیا۔

پرتشدد مظاہرین کے خلاف ایکشن کا فیصلہ وزیر قانون پنجاب راجہ بشارت کی زیر صدارت منعقدہ اجلاس میں کیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ احتجاج کی وجہ سے بند راستے کھولنے کے لیے حکمت عملی طے کرلی گئی، راستے کھلوانے سے متعلق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی ہدایات نچلی سطح تک پہنچائی گئیں۔

ذرائع کے مطابق ضلعی انتظامیہ کو اپنے اپنے علاقے میں بند سڑکیں کھلوانے کی ہدایت کی گئی ہے۔

وزیر قانون راجہ بشارت نے کہا کہ ذرائع آمدورفت بحال کرکے عوام کی مشکلات دور کی جائیں، سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے، سیکیورٹی اہلکاروں پر تشدد پر مقدمات قائم کرنے کی ہدایت کردی گئی ہے۔

راجہ بشارت نے کہا کہ مظاہرین احترام رمضان کے پیش نظر پرتشدد، احتجاج فوری روک دیں، ماہ مقدس میں مظاہروں کے بجائے آزادانہ عبادت کرنے دیں۔

وزیر قانون پنجاب نے کہا کہ تشدد اور توڑ پھوڑ دین اسلام کی پر امن تعلیمات کے برعکس ہے، رمضان کے پیش نظر عوام کے لیے مشکلات کے باعث مظاہرے کو ختم کردیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز سے مذہبی جماعت کی جانب سے ملک کے مختلف شہروں میں پر تشدد مظاہرے جاری ہیں جس کے باعث ٹریفک کی روانی معطل ہوگئی اور شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں